صفحہ اول تازہ ترین English
تازہ ترین
پاکستان-بھارت تعلقات کے عملی پہلو چھاپیے ای میل
سیمینار

iftekhar gilani1-290x30023 فروری 2018ء کو انسٹی ٹیوٹ آف پالیسی اسٹڈیز میں ”پاکستان-بھارت تعلقات کے عملی پہلو“ کے موضوع پرایک سیمینار منعقد ہوا جس سے روزنامہ نیوز اینڈ اینیلسز نئی دہلی بھارت کے بیورو چیف اور نامور کشمیری صحافی سید افتخار گیلانی اور کشمیر نژاد برطانوی صحافی مرتضیٰ شبلی نے خطاب کیا۔ آئی پی ایس کی ریسرچ ٹیم کے ساتھ ہونے والی اس نشست میں دونوں ملکوں کے درمیان دو طرفہ تعلقات کی غیر معمولی نوعیت پر سیر حاصل گفتگو ہوئی۔

مزید پڑھیے۔۔۔
 
بڑے ڈیم تنازعات کا باعث ہیں تو چھوٹے ڈیم بنائیں چھاپیے ای میل
سیمینار

Pak first National Water Policy - An Appraisalسابق وفاقی سیکرٹری اور پانی و توانائی کے امور کے نامور ماہر اشفاق محمود نے سالہا سال  تاخیر سے آنے والی پاکستان کی پہلی نیشنل واٹر پالیسی کی متفقہ منظوری پر تبصرہ کرتے ہوے کہا کہ دنیا بھر میں اب رائے بڑے ڈیموں کی بجائے چھوٹے ڈیموں کی تعمیر کی طرف مبذول ہورہی ہے۔پاکستان کے لیے بھی یہی سوچ موافق ہے خصوصاً ایسے حالات میں کہ جب بڑے ڈیموں کی تعمیر تنازعات کا باعث بن رہی ہے اوران کی تعمیر پر بھاری قرضوں اور بڑی سرمایہ کاری کی ضرورت ہو گی۔

مزید پڑھیے۔۔۔
 
آئی پی ایس نیوز کا تازہ شمارہ - نمبر 96 چھاپیے ای میل
نئی مطبوعات

ipsnews96آئی پی ایس نیوز کا 96واں شمارہ (اپریل-جون 2018ء) اب آن لائن دستیاب ہے۔ یہ انسٹی ٹیوٹ آف پالیسی اسٹڈیز، اسلام آباد کا سہ ماہی نیوز لیٹر ہے جس کا مقصد انسٹی ٹیوٹ کی سرگرمیوں کو اجاگر کرنا ہے۔ ان سرگرمیوں میں سیمینار، تبادلۂ خیال کی نشستیں، کانفرنسیں، مکالمے، گول میز گفتگو وغیرہ شامل ہیں، جن میں متنوع موضوعات پر اظہارِ خیال کیا جاتا ہے۔ نیز اس میں استعدادِکار میں اضافے کے پروگرام/ورک شاپس بھی شامل ہیں۔ آئی پی ایس نیوز اپنے قارئین کو ادارہ کی تازہ ترین مطبوعات سے بھی باخبر رکھتا ہے۔

مزید پڑھیے۔۔۔
 
افغان وفد کو سول سوسائٹی سیکٹر میں مقامی فریم ورک تیار کرنے کا مشورہ چھاپیے ای میل
سیمینار

Afghan-delegates-from-AICS thumb-300x279افغانستان انسٹی ٹیوٹ آف سول سوسائٹی (AICS) کے نو رکنی وفد کو یہ مشورہ دیا گیا کہ وہ مقامی اقدار اور علاقوں کے مسائل کو سامنے رکھتے ہوئے سول سوسائٹی سیکٹر میں ایک مقامی فریم ورک وضع کریں۔ اس طرح سے وہ اپنے ملک میں شہری اداروں اور تنظیموں کا ایک مضبوط اور کارآمد نیٹ ورک تشکیل دے سکیں گے۔ نورکنی وفد پاکستان میں سول سوسائٹی کے حوالہ سے معاملات کو بہتر بنانے کے لیے اپنی تعلیم و تربیت کے نکتۂ نظرسے پاکستان کے دورے پر تھا۔

مزید پڑھیے۔۔۔
 
مزید مضامین...
«شروعپیچھے12345678910آگےآخر»

صفحہ: 3