صفحہ اول سرگرمیاں English
تازہ سرگرمیاں
چین پاکستان اقتصادی راہداری: توانائی کا پہلو پی ڈی ایف چھاپیے ای میل
سیمینار

cpeck1چین پاکستان اقتصادی راہداری پاکستان کے لئے ایک عظیم موقع ہے۔ اس کے فوائد سمیٹنا تبھی ممکن ہو گا کہ اس پر پوری منصوبہ بندی سے کاموں کا آغاز کیا جائے۔ پاکستان ایک دہائی سے زیادہ عرصے سے توانائی کے بحران کا شکار ہے جسکی ایک وجہ مناسب سرمایہ کاری کا فقدان اور اس سے متعلق دیگر شعبوں کے لیے رقوم کی فراہمی ہے۔ ایسے میں سی پیک منصوبہ میں توانائی  کا شعبہ  ۳۲ بلین ڈالر کی کثیر سرمایہ کاری کے باعث ایک شاندار موقع کی موجودگی کا احساس دلاتا ہے۔

مزید پڑھیے۔۔۔
 
ایران اور مغرب کے درمیان مفاہمت: جنوبی ایشیاء پر اس کے مضمرات پی ڈی ایف چھاپیے ای میل
شئیرنگ انسائٹ

iranso  انسٹیٹیوٹ آف پالیسی سٹڈیز میں 'ایران اور مغرب کے درمیان مفاہمت اور جنعبی ایشیاء پر اس کے مضمرات' کے موضوع پر ۶ جون ۲۰۱۶ کو ایک گول میز کانفرنس کا انعقاد کیا گیا۔ کانفرنس کے مرکزی اسپیکر ایرانی امور کے ماہر اورڈنمارک میں قائم  پاکستان ہائوس نامی تھنک ٹینک کے ڈائریکٹر جنرل رانا محمد اطہر جاوید  تھے جبکہ کانفرنس کی صدارت ایمبیسیڈر ریٹا ئرڈ جناب خالد محمود ، چئرمین انسٹیٹیوٹ آف اسٹریٹیجک اسٹڈیز ،اسلام آباد نے کی۔

مزید پڑھیے۔۔۔
 
نیو کلیئر سپلائر گروپ(NSG)کی رکنیت پاکستان اور بھارت دونوں کو ملنی چاہیے پی ڈی ایف چھاپیے ای میل
سیمینار

nsg1نیو کلیئر سپلائر گروپ(NSG)کی رکنیت حاصل کرنا پاکستان کے لیے انتہائی اہمیت رکھتا ہے تاکہ وہ اپنے دفاعی،اقتصادی اور توانائی سے متعلق اہداف حاصل کر سکے۔پاکستان نے NSGکے راہنما اصولوں سے اپنی وابستگی کا برملا اظہار کرتے ہوئے 19مئی 2016کو اس کی رکنیت کے لیے باضابطہ طور پر درخواست دی ہے،تاہمNSGکی رکنیت ایف ایم سی ٹی(FMCT) کی شرائط پر مبنی ہونی چاہیے

مزید پڑھیے۔۔۔
 
چین پاکستان اقتصادی راہداری: توانائی کا حصہ پی ڈی ایف چھاپیے ای میل
سیمینار

cpec'چین پاکستان اقتصادی راہداری: توانائی کا حصہ' کے موضوع پر یکم جون ۲۰۱۶ کو ہونیوالی ایک گول میزمیں توانائی کے ماہرین نے اس بات پر زور دیا کہ حکومت چین کو قائل کرے کہ دیامربھاشا ڈیم اور پاک ایران گیس پائپ لائن منصوبے کی فنانسنگ راہداری منصوبے کے تحت کی جائے۔

مزید پڑھیے۔۔۔
 
«شروعپیچھے12345678910آگےآخر»