صفحہ اول تازہ سرگرمیاں - سیمینار English
سیمینار


عالمی یومِ امن:دائیں بازو کی انتہاپسندی علاقائی اور عالمی امن کے لیے خطرہ ہے چھاپیے ای میل

World-Peace-Day thumbدائیں بازو کی انتہاپسندی کو بڑھانا علاقائی اور عالمی امن کے لیے خطرہ ہے۔ پوری دنیا میں دائیں بازو کی انتہاپسندی کا بڑھنا خطرے کے قریب پہنچنے کی واضح علامت ہے اور اس کے نتیجے میں ہونے والی پیش رفت جس طرح کہ ہندوستانی مقبوضہ کشمیر میں ہندوتوا نظریے پر قائم بھارتی حکومت کے اقدامات جیسے واقعات عالمی امن کے لیے انتہائی سنگین خطرہ ہیں۔

مزید پڑھیے۔۔۔
 
کشمیر میں ارتقا پذیر صورتِ حال چھاپیے ای میل

Evolving-Situation-in-Kashmir thumbاس وقت بھارت کی جموں و کشمیر کو ہڑپ کرلینے کی بھوک ختم کرنے اور دہائیوں پرانی حالت زار تبدیل کردینے کا نادر موقع ہے:آئی پی ایس سیمینار

مزید پڑھیے۔۔۔
 
اسلام اور اصول انسانیت چھاپیے ای میل

islam-and-humanitarian-principlesآئی پی ایس میں منعقدہ دو روز ہ قومی  کانفرنس میں بین الاقوامی قانون کے ماہرین، علمائے دین اور  ماہرین طب نے تنازعات اور آفات میں  در پیش انسانیت سوز مسائل کو حل کرنے میں مددگار بین الاقوامی قوانین پر نظر ثانی کی اہمیت پر توجہ دلائی ۔ انہوں نے صحت  کی دیکھ بھال سے متعلق ماہرین بالخصوص تنازعات اور حادثات سے نمٹنے والے افراد کے لیے ایسے  رہنما اصول اپنانے پر زور دیا جن کے ذریعے اصول انسانیت اور طبی اخلاقیات کی پاسداری کی جا سکے ۔

مزید پڑھیے۔۔۔
 
پاکستان کی تعمیر و تشکیل اور علّامہ محمد اسد چھاپیے ای میل

اسلامی نظریاتی کونسل اور انسٹیٹیوٹ آف پالیسی اسٹڈیز، اسلام آباد کے باہمی اشتراک سے 'پاکستان کی تعمیر و تشکیل اور علّامہ محمد اسد' کے عنوان سے ۲۳ اگست ۲۰۱۹ کو ایک خصوصی سیمینار کا انعقاد کیا گیا جس میں علّامہ کی پاکستان اور اسلام کے لیے متفرق علمی و فکری خدمات پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا گیا کہ علّامہ کا کام دورِ حاضِر میں مدینہ کی طرز پر ریاست کی تشکیل میں بہت مفید ثابت ہو سکتا ہے۔ 

مزید پڑھیے۔۔۔
 
جدید دنیا میں میری ٹائم ڈپلومیسی چھاپیے ای میل

انسٹی ٹیوٹ آف پالیسی اسٹڈیز اور میری ٹائم اسٹڈی فورم کے اشتراک سے "جدید دنیا میں میری ٹائم ڈپلومیسی" کے موضوع پر8 اگست 2019 کو منعقد ہونے والے سیمینار میں شرکاءنے جدید دور میں بحری امور پر ہونے والی پیشرفت کو ہوش ربا قرار دیتے ہوئے پاکستان کے محل وقوع میں ہونے والی ترقی پر گفتگو کی اور دفتر خارجہ پر زور دیا کہ وہ اس اہم میدان میں تخصص کے لیے میری ٹائم ڈپلومیسی کا خصوصی شعبہ قایم کرے جہاں پاکستان نیوی، وزارت میری ٹائم افئیرز، وزارت تجارت، وزارت دفاع سمیت دیگر اہم متعلقہ اسٹیک ہولڈروں کے لائژن اہلکار مل کر مربوط حکمت عملی کے ساتھ کام کریں۔ 

مزید پڑھیے۔۔۔
 
«شروعپیچھے12345678910آگےآخر»

صفحہ: 9